جعلساز بشیر ضیائی کی ایک اور جعلسازی منظر عام پر آ گئی

میرپور(اڑان نیوزر)جعلساز بشیر ضیائی کی ایک اور جعلسازی منظر عام پر آ گئی جعلی ایس ڈی او سبیل چوہان ،دوہرے ڈومیسائل کا حامل نکلا، ایک ڈومیسائل گوجرانوالہ اور دوسرا میرپورسے بنوا لیا مفادات حاصل کرنے کے لئے بیٹے کو مہاجرین کوٹہ پر بھرتی کروا لیا حقدار منہ دیکھتے رہ گئے تفصیلات کے مطابق جعلساز چوہدری محمد بشیر ضیائی ولد فرمان علی کی ایک اور دو نمبر سامنے آ گئی مفادات اور لالچ نے مذکور کو اندھا کر دہ اپنے بیٹے ایس ڈی او سبیل چوہان کے دوہرے ڈومیسائل جاری کر ادیئے جو کہ قانوناً جرم ہیں موصوف نے پہلا ڈومیسائل میرپور ڈپٹی کمشنر آفس سے مورخہ 10-08-2007کو جاری کرایا جبکہ بعد ازاں ڈپٹی کمشنر گوجرانوالہ کے آفس سے حقائق کو پوشیدہ رکھ کر اسی بیٹے سبیل چوہان کا مورخہ 24-12-2011کو ایک اور ڈومیسائل جاری کروا لیا جبکہ موصوف نے اپنا ریاست باشندہ میرپور سے جاری کروا رکھا ہے بیٹے کے شناختی کارڈ پر بھی نام میرپور کا لکھا ہوا ہے جبکہ مفادات حاصل کر نے کے لئے اپنے بیٹے کو مہاجرین مقیم پاکستان ظاہر کر دیا اور مبینہ طور پر دوہری دستاویزات پر محکمہ برقیات میں نوکری دلواکر حقداروں کو ان کے حق سے محروم کر دیا دلچسپ امر یہ ہے کہ موصوف نے جعلسازی ظاہر ہونے پر مبینہ طور پر کلریکل سٹاف کی ملی بھگت سے بیک ڈیٹس میں ترک سکونت لی جو ڈپٹی کمشنر کے علم میں آنے کے بعد بعد از تحقیقات منسوخ کر دی جبکہ بشیر ضیائی کیس کا دلچسپ پہلو یہ بھی ہے کہ اس کی فیملی کے بعض ممبرز میرپور مقامی کوٹے پر ملازمت کر رہے ہیں جبکہ بعض مہاجرین کوٹے پر نوکری کر رہے ہیں عوامی وسماجی حلقوں نے اس جعلسازی پر سخت ایکشن لینے کا مطالبہ کیا ہے کیونکہ مہاجرین کوٹے پر نوکری حاصل کرنے کے لئے ڈپٹی کمشنر بحالیات سے باشندہ ریاست جاری ہونا ضروری ہے جو کہ بشیر ضیائی اور سبیل چوہان کا نہ ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں