شادی شدہ درندہ صفت نوجوان نے پیار کا جھانسہ دیکر ایک اور بائیس سالہ لڑکی سے شادی کر لی

ہٹیاںبالا کے نواحی گائوں دھنی شاہدرہ کے شادی شدہ درندہ صفت نوجوان نے پیار کا جھانسہ دیکر ایک اور بائیس سالہ لڑکی سے شادی کر کے اسے چار ماہ تک پیسوں کی لالچ میں اپنے کزنوں سے جنسی زیادتی کا نشانہ بنواتا رہا

چناری(اعجاز احمد میر ،خصوصی رپورٹر)وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر خان کے آبائی ضلع جہلم ویلی ،ہٹیاںبالا کے نواحی گائوں دھنی شاہدرہ کے شادی شدہ درندہ صفت نوجوان نے پیار کا جھانسہ دیکر ایک اور بائیس سالہ لڑکی سے شادی کر کے اسے چار ماہ تک پیسوں کی لالچ میں اپنے کزنوں سے جنسی زیادتی کا نشانہ بنواتا رہا جنسی ہوس پوری نہ کرنے پر لڑکی پر ظالمانہ تشدد موقعہ ملتے ہی لڑکی ظالم نوجوان کے گھر سے فرار ہو کر سٹی تھانہ ہٹیاں بالا پہنچ گئی وزیراعظم اور انسپکٹر جنرل پولیس آزاد کشمیر سے انصاف دلانے کا مطالبہ ۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم آزاد کشمیر کے آبائی ضلع جہلم ویلی کے نواحی علاقے باٹ بنی کی رہائشی مسماۃ(ح)دختر محمد اسلم نے صحافیوں کو بتایا کہ دھنی شاہدرہ کے شادی شدہ رہائشی آفتاب مذمل لوہار ولد مذمل لوہار نے اسے اپنے پیار میں پھنسا کرپانچ جنوری 2019ء کے روز نکاح کیا اور27جنوری کے روز اپنے ذاتی گھر لے گیا 27جنوری سے لیکر آج تک آفتاب نے مھجے اپنی بیوی سمجھنے کے بجائے رکیل بنائے رکھا اپنی پہلی بیوی مسماۃ لبنی کے ساتھ ملکر مھجے جنسی بد فعلی کا نشانہ بنواتا اور اسکے عوض پیسے لیتا رہا اس کے دو کزنوں محمد راشد ولد سخی اور محمد رفاقت ولد منور دین کی جنسی ہوس پوری نہ کرنے پر میرا خاوند،اسکی پہلی بیوی لبنی اور دو کزن نے مھجے چار ماہ سے رسیوں کے ساتھ باندھ کر آہنی راڈوں اور ڈنڈوں سے مارتے رہے اور میرے جسم کا کوئی حصہ باقی نہیں جس پر ذخموں کے نشان نہ ہوں آج اتوار کی صبح بڑی مشکل سے بھاگ کر سٹی تھانہ ہٹیاں بالا پہنچی ہوں وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر خان اور آئی جی مھجے انصاف دلوائیںمیرے ساتھ بہت زیادتی کی گئی ہے اگر مھجے انصاف نہ ملا تو میں خودکشی کرنے پر مجبور ہو جائوں گی زیادتی کا شکار ہونی والی بائیس سالہ مسماۃ(ح)نے تھانہ پولیس ہٹیاں بالا میں باقائدہ درخواست دے دی ہے آخری اطلاعات کے موصول ہونے تک مقدمہ درج نہیں ہوا تھا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں